Education

تنگ حال کے ساتھ نیک سلوک کا صلہ اس آرٹیکل کو ضرور پڑھیں دوستوں کے ساتھ ضرور شیئر کریں

ابن عباس رضی اللہ عنہ سے مروی ہے. انہوں نے فرمایا کہ رسول اللہؐ مسجد میں یہ کہتے ہوئے داخل ہوئے. ’’تم میں سے کون پسند کرے گا کہ اللہ تعالیٰ اسے جہنم کی گرمی اور شدت سے محفوظ رکھیں؟‘‘یہ بات آپؐ نے تین مرتبہ دہرائی تو سب نے کہا. ’’ہم سب یہ پسند کریں گے یا رسول اللہؐ.‘‘تو فرمایا. ’’جس نے کسی تنگ حال کو مہلت دی یا اس کی تنگی دور کر دی،اللہ تعالیٰ اسے جہنم کی گرمی سے محفوظ رکھیں گے.‘‘

اخلاق کا بگاڑ پسند نہیں خلیفہ مامون الرشید، قاضی یحییٰ بن اکثم کی بہت قدر کرتا تھا. وہ دن یا رات کے کسی حصے میں مامون کے پاس آئیں تو ان کے لیے کوئی رکاوٹ نہ تھی. ایک مرتبہ قاضی یحییٰ نے مامون کے پاس رات گزاری. گفتگو کرتے ہوئے کافی رات گزر گئی مامون کو پیاس محسوس ہوئی. اس نے آواز دی: ’’یا غلام!‘‘دو تین بار آواز دینے کے بعد ایک ترکی غلام آیا اور اس نے تیز لہجے میں کہا ’’کیا لگا رکھا ہے یا غلام یا غلام. نہ خود سوتے ہیں نہ ہمیں سونے دیتے ہیں.

‘‘غلام کے جانے کے بعد مامون نے قاضی یحییٰ سے کہا کہ ان کے ساتھ اگر نرمی برتی جائے تو ان کے اخلاق بگڑ جاتے ہیں اور اگر سختی برتی جائے تو یہ ٹھیک رہتے ہیں، لیکن ہمارے اخلاق بگڑ جاتے ہیں. لیکن میں یہ نہیں کر سکتا کہ ان کے اخلاق درست کرنے کے لیے اپنے اخلاق بگاڑ لوں.‘‘بڑھیا کی بددعا وہب بن منبہؒ کہتے ہیں کہ کسی ظالم بادشاہ نے شاندار محل بنوایا. ایک مفلس بڑھیا آئی اور اس نے محل کے پہلو میں اپنی کٹیا بنا لی. جس میں سکون سے رہتی تھی. ایک مرتبہ ظالم بادشاہ نے سوار ہو کر محل کے اردگرد چکر لگایا تو اسے بڑھیا کی کٹیا نظر آئی.

اس نے پوچھا ’’یہ کس کی ہے؟‘‘کہا گیا کہ ’’یہ ایک بڑھیا کی ہے اور وہ اس میں رہتی ہے.‘‘چنانچہ اس نے حکم دیا کہ ’’اسے گرا دو.‘‘لہٰذا اسے گرا دیا گیا. جب بڑھیا واپس آئی تو اپنی منہدم کٹیا دیکھ کر پوچھا کہ ’’اسے کس نے گرایا ہے؟‘‘ لوگوں نے کہا ’’اسے بادشاہ نے دیکھا اور گرا دیا.‘‘تب بڑھیا نے آسمان کی طرف سر اٹھایا اور کہا ’’اے اللہ! اگر میں حاضر نہیں تھی تو، تو کہاں تھا؟‘‘اللہ تعالیٰ نے جبرائیل علیہ السلام کو حکم دیا کہ ’’محل کو اس کے رہنے والوں پر الٹ دو.‘‘ اور ایسا ہی کیا گیا.

Comments

comments

Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Most Popular

To Top